اسٹیٹ بینک نے 6 ماہ کے لیے مانیٹری پالیسی کا شیڈول جاری کردیا

یہ اقدام مانیٹری پالیسی وضع کرنے کے عمل کو مزید شفاف بنانے کے لیے اٹھایا گیا ہے۔

اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے 6 ماہ کے لیے مانیٹری پالیسی کا شیڈول جاری کردیا ہے۔ آئندہ 6 ماہ کے دوران 4 مرتبہ مانیٹری پالیسی جاری کی جائے گی۔

تاریخ میں پہلی بار اسٹیٹ بینک نے مانیٹری پالیسی کے اجلاسوں کا شیڈول جاری کردیا ہے۔ یہ اقدام مانیٹری پالیسی وضع کرنے کے عمل کو مزید شفاف بنانے کے لیے اٹھایا گیا ہے۔ اسٹیٹ بینک نے مانیٹری پالیسی کمیٹی (ایم پی سی) کے نصف سالہ شیڈول کا اعلان رولنگ کی بنیاد پر شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگے گا، چیئرمین ایف بی آر

مرکزی بینک کے مطابق ایک سال کے عرصے میں 6 مرتبہ مانیٹری پالیسی کا اعلان کیا جائے گا جبکہ ہنگامی بنیادوں پر مانیٹری پالیسی کا اضافی اعلان بھی کیا جاسکتا ہے۔

اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ آئندہ 6 ماہ میں 4 بار مانیٹری پالیسی کا اعلان کیا جائے گا۔ 28 مئی کو اگلی مانیٹری پالیسی، اس کے بعد بالترتیب 27 جولائی، 20 ستمبر اور آخر میں 26 نومبر کو پالیسی کا اعلان کیا جائے گا۔

مرکزی بینک کے مطابق اس اقدام سے مانیٹری پالیسی کے عمل کو مزید شفاف بنانے میں مدد ملے گی۔

اسٹیٹ بینک آف پاکستان مارکیٹ سے غیر یقینی کی صورتحال کو ختم کرنے کے لیے اس سے قبل بھی مستقبل میں شرح سود میں کمی یا اضافے پر رہنمائی کرچکا ہے۔

ماہرین معیشت کا کہنا ہے کہ اس اقدام کا مقصد عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) کی شرائط کے مطابق اسٹیٹ بینک کی خود مختاری کی راہ ہموار کرنے کے لیے شفافیت کا تاثر پیدا کرنا ہے۔

متعلقہ تحاریر