نیوز 360 کی خبر پر کمپٹیشن کمیشن کا فوڈ پانڈہ کے خلاف تحقیقات کا آغاز

نیوز 360 نے آن لائن ڈلیوری سروس فوڈ پانڈہ کی جانب سے رائیڈرز کی فی سوار کمیشن میں کمی کی خبر دی تھی۔

نیوز 360 کی خبر پر ایکشن لیتے ہوئے کمپٹیشن کمیشن آف پاکستان نے آن لائن فوڈ ڈلیوری سروس فوڈ پانڈہ کے خلاف تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔

کمپٹیشن کمیشن آف پاکستان نے آن لائن فوڈ ڈلیوری پلیٹ فارم فوڈ پانڈہ کے خلاف بالادستی کے غلط استعمال اور آن لائن فوڈ ڈلیوری پلیٹ فارم مارکیٹ میں کمپٹیشن ایکٹ 2010 کے سیکشن 3 اور 4 (ممنوعہ معاہدے ) کی ممکنہ خلاف ورزی پر تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

فوڈ پانڈہ انتظامیہ نے رائیڈرز کا معاشی قتل شروع کردیا

واضح رہے گزشتہ روز نیوز 360 نے آن لائن فوڈ ڈلیوری سروس فوڈ پانڈہ کی جانب سے رائیڈرز کی کمیشن کم کرنے اور انتظامیہ کی جانب سے کارکنان کو دھمکانے کی خبر دی تھی۔

خبر میں بتایا گیا تھا کہ ڈلیوری ایپ فوڈ پانڈہ کی انتظامیہ نے رائیڈرز کی کمیشن کم کرکے فی سواری (پر رائیڈ) 30 سے 35 روپے کردی ہے جبکہ اس سے پیشتر فی سواری (پر رائیڈ) یہ کمیشن 60 سے 65 روپے تھی۔

یاد رہے کہ فوڈ پانڈہ انتظامیہ کی جانب سے کمیشن میں کمی کے خلاف رائیڈرز نے لاہور پریس کلب کے سامنے زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا تھا۔ رائیڈرز نے ہاتھوں پر پلے کارڈز اور بینرز اٹھا رکھے جن پر رائیڈرز کا معاشی قتل بند کرو کے نعرے درج تھے۔

نیوز 360 سے گفتگو کرتے ہوئے فوڈ پانڈہ رائیڈرز نے بتایا تھا کہ کمپنی نہ انہیں ایکسیڈنٹ کی صورت میں کوئی ادائیگی کرتی ہے اور نہ ہی ڈکیتی کی صورت میں کمپلسیشن دی جاتی ہے۔

نیوز 360 سے گفتگو کرتے ہوئے فوڈ پانڈہ رائیڈرز نے بتایا تھا کہ کلومیٹر کا ریٹ واضح نہیں کیا جارہا ہے اور تو اور صرف 3 دن یعنی جمعہ ، ہفتہ اور اتوار کا ٹارگٹ بونس دیا جاتا ہے۔ ہماری انشورنس برائے نام ہے ہمارے ساتھ کوئی حادثہ ہوجائے یا ڈکیتی ہوجائے کمپنی کی جانب سے کچھ نہیں دیا جاتاہے۔ ہماری موٹر سائیکل، موبائل یا پیسے چلے جائیں تو کمپنی پیسے دینے کی بجائے ایف آئی آر درج کرانے کا مشورہ دے دیتی ہے۔ کمپنی سے پیٹرول مانگا جائے تو کہا جاتا ہے کہ کام کرنا کریں ورنہ چلیں جائیں۔

Facebook Comments Box