پاکستان میں الیکٹرانکس اشیاء کی پیداوار میں ریکارڈ اضافہ

اعدادوشمار کے مطابق مالی سال 2020-21 کی دوران ریفریجریٹرز کی پیداوار 1 لاکھ 46 ہزار 539 یونٹس رہی۔

مالی سال 2020-21 میں پاکستان میں الیکٹرانکس اشیاء کی پیداوار میں ریکارڈ اضافہ دیکھا گیا ہے۔ ملک بھر میں ریفریجریٹرز کی پیداوار 12 فیصد ماہانہ کی بنیاد پر اضافے کے ساتھ 1 لاکھ 46 ہزار 539 یونٹس تک پہنچ گئی ہے، جوکہ گزشتہ 37 ماہ کی بلند ترین سطح ہے۔

مالی سال 2020-21 کی پہلی چار سہ ماہیوں میں ریفریجریٹرز کی پیداوار گزشتہ 12 سہ ماہیوں کے مقابلے میں سب سے زیادہ ریکارڈ کی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیے

افغانستان کی بدلتی صورتحال کے پاکستانی معیشت پر برے اثرات

اعدادشمار کے مطابق ایئر کنڈیشنر کی پیدوار 38 فیصد اضافے سے 83 ہزار 537 یونٹس تک پہنچ گئی ہے۔

مارکیٹ ذرائع کے مطابق شدید گرمی کے موسم میں سیل بڑھ جانے سے ایئر کنڈیشنر کی پیداوار گزشتہ 28 ماہ کے دوران بلند ترین سطح پر رہی۔

اعدادوشمار کے مطابق مالی سال 2020-21 کی چار سہ ماہیوں کے دوران ایئر کنڈیشنر کی پیداوار گزشتہ 16 سہ ماہیوں کے دوران سب سے زیادہ رہی۔

ملک میں ڈیپ فریزر کی پیداوار میں بھی ریکارڈ اضافہ دیکھنے کو ملا ہے۔ ایک اندازے کے مطابق جون کی پیداوار مئی کے کے مہینے کے مقابلے میں 38 فیصد اضافے سے 16 ہزار 425 یونٹس رہی۔ یہ پیداوار تقریبا گزشتہ 22 ماہ کی بلند ترین تھی۔

جون کے دوران بجلی کی پیداوار میں ریکارڈ اضافہ

پاکستان میں الیکٹرانکس اشیاء کے ساتھ ساتھ جون 2021 میں الیکٹرک میٹروں کی پیداوار بھی 17 فیصد بڑھ کر 1 لاکھ 55 ہزار 175 ہو گئی۔ مالی سال 2020-21 کی چار سہ ماہیوں میں بجلی کے میٹروں کی پیداوار گزشتہ 12 سہ ماہیوں سے زیادہ ریکارڈ کی گئی۔

دریں اثنا ٹرانسفارمرز کی پیداوار جون کے دوران ماہانہ کی بنیاد پر 1 فیصد کمی سے 2 ہزار 176 یونٹس رہ گئی ہے۔

Facebook Comments Box