حکومت کا مہنگائی کے ہاتھوں ستائے عوام پر گیس حملہ، ایل پی جی مزید مہنگی

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے غریبوں کے لیے ایک نئی مشکل پیداکرتے ہوئےایل پی جی مزید مہنگی کردی ،کمرشل سلنڈر 535 روپے اضافے سے  9804 روپے  کا ہوگیا  جبکہ گھریلو  2548 روپے میں دستیاب ہوگا

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے مہنگائی کے ستائے اور معاشی مشکلات  کا شکار ملک کے غریبوں کے لیے ایک نئی مشکل پیداکرتے ہوئےمائع پٹرولیم گیس (ایل پی جی)کی قیمت میں 12روپے فی کلو اضافہ کر دیا۔

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نےمائع پٹرولیم گیس (ایل پی جی) کی قیمت میں 12روپے فی کلو اضافے کا نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے۔ایل پی جی ایسوسی ایشن  سستی گیس کی فراہمی کیلئے ٹیکسز کے خاتمے کا مطالبہ کیا ۔

یہ بھی پڑھیے

وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار کا بجٹ خسارہ حد سے زیادہ بڑھنے کا اعتراف

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) کے نوٹیفکیشن کے مطابق ایل پی جی  کے گھریلو سلنڈر کی قیمت میں  139 روپے  اضافہ کیا گیا ہے  جبکہ کمرشل سلنڈر کی قیمت میں 535 بڑھائی گئی ہے ۔

چیئرمین ایل پی جی ایسوسی ایشن پاکستان عرفان کھوکھر  کا کہنا ہے کہ ایل پی جی گھریلو سلنڈر 139 روپے مہنگا ہونے کے بعد 2548 روپے کا ہوگیا ہے ۔  فی کلو ایل پی جی کی قیمت ایل پی جی 216 روپے  ہو گئی ہے ۔

عرفان کھوکھر نے بتایا کہ کمرشل سلنڈر کی قیمت میں 535 روپے اضافہ کیاگیا ہے جس کے بعد کمرشل سلنڈر 9804 روپے میں ملک بھر میں دستیاب ہوگا۔

چیئرمین ایل پی جی ایسوسی ایشن پاکستان عرفان کھوکھر نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ سستی گیس کی فراہمی کے لیے مائع پٹرولیم گیس (ایل پی جی)  عائد کیے گئے تمام تر ٹیکسوں کا خاتمہ کیا جائے۔

متعلقہ تحاریر