بشریٰ انصاری کا ناقدین کو منہ توڑ جواب

اداکارہ نے سوشل میڈیا پوسٹ میں کہا کہ رقص کی ویڈیو پر لوگوں کا ردعمل دیکھ کر بہت دکھ ہوا۔

بشریٰ انصاری اور شوبز انڈسٹری کے ابھرتے ہوئے گلوکار اذان سمیع خان کی ایک ساتھ رقص کرنے کی ویڈیو وائرل ہوئی تو مداحوں نے اداکارہ کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ بشریٰ انصاری نے فوٹو شیئرنگ ایپ انسٹاگرام پر مداحوں کے رویے پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔

ہم ٹی وی کی سربراہ اور معروف ہدایتکارہ سلطانہ صدیقی کے نواسے کی شادی کی تقریب میں صنم جنگ، کبریٰ خان، سجل علی اور اسد صدیقی سمیت متعدد فنکاروں نے شرکت کی۔ اس موقعے پر مختلف اداکاروں نے ڈانس کیا۔ بشریٰ انصاری نے اذان سمیع خان کے ساتھ رقص کیا جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی اور صارفین نے اداکارہ کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by Irfanistan (@irfanistan)

یہ بھی پڑھیے

بشریٰ انصاری اور زارا نور عباس مداحوں کی مشکور

بشریٰ انصاری نے مداحوں کی تنقید پر خاموشی توڑ دی ہے ۔ سینئر اداکارہ نے انسٹاگرام پوسٹ میں لکھا کہ وہ پچھلے 3 ماہ سے شدید صدمے کی حالت میں تھیں اور بہن کو کھونے کا غم آخری سانس تک ان کے دل میں رہے گا۔ بشریٰ انصاری نے وضاحت دیتے ہوئے کہا کہ خود کو غم کی کیفیت سے نکالنے کے لیے 2 روز قبل دوستوں کے بے حد اسرار  پر ڈھولکی کی تقریب  میں شرکت  کی۔ پہلے پوتے کی شادی سلطانہ صدیقی کے لیے خاص موقع تھا اور انہوں نے ہدایتکارہ کی خوشی میں شامل ہونے کی کوشش کی۔ اس خوشی میں اپنا حصہ ڈالنے کے لیے اپنے بیٹوں جیسے اذان سمیع خان کے ساتھ 2 منٹ رقص کیا۔

سینئر اداکارہ نے لکھا کہ انہیں لوگوں کا ردعمل دیکھ کر بہت دکھ ہوا۔ لوگ ہمیں صرف دکھی دیکھنا چاہتے ہیں صرف اس لیے کہ ہم مشہور ہیں اور ایک خاص عمر کو پہنچ چکے ہیں۔ یہ کس قدر افسوسناک بات ہے۔ اداکارہ کے مطابق زندگی کا لطف اٹھانے کے لیے وہ عمر ہی سب سے بہترین ہوتی ہے جب آپ اپنی تمام تر ذمہ داریاں ادا کرچکے ہوں۔ انہوں نے کہا کہ اگر آپ کے خیال میں عمررسیدہ ہونا کوئی خامی ہے تو برائے مہربانی اپنی سوچ کو بدلیں یا پھر اپنے والدین کے ساتھ بھی یہی سلوک کریں۔

بشریٰ انصاری نے مزید لکھا کہ وہ ٹرولز کو جواب دینے کے قابل نہیں سمجھتی ہیں کیونکہ وہ تو حجاب پہننے والیوں کو بھی نہیں بخشتے ہیں۔ معروف اداکارہ نے سوشل میڈیا صارفین سے درخواست کی کہ وہ لوگوں کو دکھ پہنچانا بند کریں۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by Bushra Bashir (@ansari.bushra)

 یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ بشریٰ انصاری کی وائرل ویڈیو پر تنقید کرنے والوں کو اُشنا شاہ نے بھی کرارا جواب دیا تھا۔ اداکارہ نے اپنی سوشل میڈیا پوسٹ میں لکھا تھا کہ پاکستانی اداکارہ اگر بہن کی وفات کے کچھ مہینوں بعد خوشی سے شادی کی تقریب میں ڈانس کرئے تو اسے تنقید کا سامنا کرنا پڑتا ہے لیکن یہی چیز اگر کسی غیر ملکی خاتون کی جانب سے سامنے آئے تو لوگ اس کی ہمت کو داد دیتے ہیں۔

سوشل میڈیا پر کسی عمر رسیدہ خاتون کے رقص کو تنقید کا نشانہ بنایا جاتا ہے جبکہ عام طور پر شادی بیاہ کی تقریبات میں یہ کوئی انوکھی بات نہیں سمجھی جاتی ہے۔

متعلقہ تحاریر