سینما انڈسٹری کی بحالی، فلمیں کون بنائے گا؟

ملک بھر میں کرونا کی صورتحال بہتر ہونے کے بعد جہاں حکومت نے دیگر سماجی سرگرمیوں پر عائد پابندی ختم کردی ہے وہیں سینما انڈسٹری کو بھی ایس او پیز کے تحت کھولنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔ اس حوالے سے نیوز 360 سے بات چیت کرتے ہوئے سینما انڈسٹری سے وابستہ لوگوں کا کہنا ہے کہ اس وقت فلمیں بہت کم ہونے سے لوگ سینما کا رخ نہیں کررہے۔ حکومت فلم انڈسٹری کی بحالی کے لیے مزید اقدامات کرئے۔

نیوز 360 کے نامہ نگار دانیال راٹھوڑ سے گفتگو کرتے ہوئے سینما ملازمین نے کہا کہ کرونا وائرس کے دوران سینماؤں کی بندش سے انہیں سخت مالی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا لیکن اب ان کی روزی بحال ہوگئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سینما گھروں کے چلنے سے ہی ان لوگوں کے گھر کا چولہا جلتا ہے، اگر حکومت 6 ماہ قبل ایس او پیز کے تحت سینما کھولنے کی اجازت دے دیتی تو ان کے لیے آسانی ہوجاتی۔ ملازمین کا کہنا ہے کہ اس وقت پاکستان میں فلمیں بہت کم بن رہی ہیں جوکہ عیدالاضحیٰ پر نمائش کے لیے پیش کردی جائیں گی۔

سینما گھروں کی بندش کے باعث کئی ملازمین کو فارغ کیا گیا جبکہ متعدد نے قرض لے کر اپنے بچوں کا پیٹ پالا۔ سینما ملازمین نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ ایس او پیز کے تحت سینما انڈسٹری کو کھلا ہی رہنے دیا جائے تاکہ ان کا روزگار چلتا رہے اور فلم انڈسٹری بھی آگے بڑھ سکے۔

یہ بھی پڑھیے

کرونا نے سینیما کو سب سے ذیادہ نقصان پہنچایا، ندیم مانڈوی والا

Facebook Comments Box