آئمہ بیگ تنقید کی زد میں

منگنی کی تقریب میں گلوکارہ کو امام ضامن باندھنے پر مخالفت کا سامنا کرنا پڑا۔

پاکستانی گلوکارہ آئمہ بیگ سوشل میڈیا صارفین کی تنقید کی زد میں آگئیں۔ منگنی کی تقریب میں ساڑھی کے ساتھ امام ضامن باندھنے پر آئمہ بیگ کو شدید مخالفت کا سامنا کرنا پڑا۔

ہمارے ملک میں مداح فنکاروں کی نجی زندگی میں کچھ زیادہ ہی دلچسپی رکھتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ان کے لباس اور انداز پر بلاوجہ تنقید بھی کی جاتی ہے۔ معروف گلوکارہ آئمہ بیگ نے اپنی منگنی کی تقریب میں سرخ رنگ کی ساڑھی زیب تن کی اور ساتھ ہی بازو پر امام ضامن باندھا۔

یہ بھی پڑھیے

ساحر علی بگا نے علیزے شاہ کو بھی گلوکارہ بنادیا

تصاویر اور ویڈیوز سوشل میڈیا پر وائرل ہوئیں تو صارفین نے انہیں آڑے ہاتھوں لے لیا۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by Media Insightpk (@mediainsightpk)

دوسری جانب چند صارفین کا کہنا تھا کہ امام ضامن باندھنا یا نہ باندھنا گلوکارہ کا نجی معاملہ ہے اس پر تنقید کا جواز نہیں بنتا۔

یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ 4 ماہ قبل آئمہ بیگ اور اداکار شہباز شگری نے انفرادی طور پر منگنی کی تھی ۔ جوڑے نے مارچ میں فوٹو شیئرنگ ایپ انسٹاگرام پر منگنی کا اعلان بھی کیا تھا اور انگوٹھیوں کے ساتھ تصاویر بھی شیئر کی تھیں۔ تاہم اب باضابطہ طور پر اہل خانہ کی موجودگی میں منگنی کی تقریب سجائی گئی جس میں شوبز انڈسٹری سے تعلق رکھنے والے فنکاروں نے بھی شرکت کی۔

شہباز شگری نے منگنی کے بعد انسٹاگرام پوسٹ میں آئمہ بیگ کو مخاطب کرتے ہوئے لکھا کہ میں نے دنیا کی بہترین لڑکی سے ملاقات کی اور اس نے مجھے اپنے ساتھ رکھنے کا فیصلہ کرلیا۔ اس پوسٹ پر اداکارہ ماہرہ خان، زارا نور عباس، مایا علی اور اداکار شہریار منور سمیت متعدد فنکاروں نے کمنٹس میں نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by Shahbaz Hamid Shigri (@shahbazshigri)

Facebook Comments Box