برطانیہ میں میڈیکل کی تاریخ کا انوکھا واقعہ رونما

برطانوی میڈیکل جرنل میں شائع ہونے والا اس نوعیت کا یہ پہلا کیس ہے۔

برطانیہ میں دوران سیکس ایک شخص اپنا عضو تناسل ہی توڑبیٹھا، جس سے میڈیکل کی دنیا میں ایک تاریخ رقم ہوگئی ہے۔

میڈیکل کی تاریخ کا یہ پہلا واقعہ برطانیہ میں اس وقت رونما ہوا جب 40 سالہ ایک شخص اپنی پارٹنر کے سیکس میں مشغول تھا، اسی دوران اسے ایک ناخوشگوار حالات سے گزرنا پڑا۔ برطانوی میڈیکل جرنل میں شائع ہونے والا اس نوعیت کا یہ پہلا کیس ہے۔ رپورٹ کے مطابق اس قسم کا واقعہ لاکھوں میں کہیں جاکر ہوتا ہے جو کہ یقیناً ایک تکلیف دہ عمل ہے۔

بی ایم جے میں شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق مریض کو عمودی طور پر ایسے فریچکر کا سامنا کرنا پڑا تھا لیکن اس نے کسی بڑی علامات کا سامنا نہیں کیا تھا۔ جس میں اس نے کوئی بڑی آواز سنی ہویا پھرکوئی نشان رونما ہوا ہو جس نے عضو تناسل کی جلد کو کسی بڑے زخم میں تبدیل کردیا ہو۔ مریض کے عضو تناسل میں معمولی طور پر سوجن تھی اور وہ فورا کھڑا نہیں ہوا جس سے وہ آہستہ آہستہ ختم ہوتا گیا۔

یہ بھی پڑھیے

برازیل کی سیکس ورکرز کا کرونا ویکسینیشن میں ترجیح کا مطالبہ

ڈاکٹرز نے مریض کی ایم آر آئی رپورٹ کروانے کے بعد دریافت کیا کہ اس شخص کے عضو تناسل کے چاروں طرف تین سینٹی میٹر لمبہ ایک مادہ پایا گیا ہے جس کو آپریشن کے بعد ختم کیا جائیگا تا کہ مریض مزید تکلیف دہ عمل سے بچ سکے۔

ایک مطالعے کے مطابق جنسی تعلقات کے دوران 88.5 فیصد تک عضو تناسل کی ہڈی میں ایک زخم پایا جاتا ہے لیکن برطانیا میں اس قسم کا واقعہ رونما ہونا یقینن ایک ریکارڈ ہے۔

متعلقہ تحاریر