خواجہ سراؤں کے 25 رکنی وفد نے پیپلز پارٹی میں شمولیت اختیار کرلی

رہنما خواجہ سرا بندیا رانا کا کہنا ہے کہ پی پی پی واحد جماعت ہے جو ہر طبقے کا خیال رکھتی ہے۔

بندیا رانا اور سارہ گل سمیت خواجہ سراؤں کے  25 رکنی وفد نے پاکستان پیپلز پارٹی میں شمولیت اختیار کرلی ہے۔ رہنما پیپلزپارٹی نثار کھوڑو کا کہنا ہے کہ ہم نئے والے تمام کارکنان کو خوش آمدید کہتے ہیں۔ 

کراچی۔ خواجہ سراؤں نے پی پی پی سندھ کے صدر نثار کھوڑو ، وقار مھدی ، سعید غنی اور جاوید ناگوری کی موجودگی میں پیپلز پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا۔ پیپلز پارٹی میں شمولیت کرنے والوں میں ثنا احمد، شہزادی رائے دیگر شامل ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ دینے کا حق، شہباز شریف 2013میں کچھ 2021میں کچھ

اپوزیشن ناکام، حکومت ریکارڈ تعداد میں قوانین منظور کرانے میں کامیاب

پیپلزپارٹی سندھ کے صدر نثار کھوڑو کا اس موقع پر کہنا تھا کہ ہم پیپلز پارٹی میں شمولیت کرنے پر خواجا سراؤں کو ویلکم کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی سب کے لئے ہے ھم  رنگ نسل کا فرق نہیں رکھتی۔

نثار کھوڑو کا کہنا ہے کہ خواتین، خواجہ سراؤں اور دیگر 52 فیصد طبقے کو ووٹ دینے اور تعلیم حاصل کرنے سے روکا جاتا ہے۔ مگر پیپلزپارٹی چاہتی ہے کہ معذوروں ، مینارٹی سمیت خواجہ سراؤں کو حقوق ملنے چاہئیں۔ انہوں نے کہا کہ ھم چاھتے ہیں کے خواجا سراؤں  کا معاشرے میں بھتر مقام بحال ہو۔

خواجہ سراؤں کی نمائندہ بندیا رانا کا کہنا تھا کہ واحد پیپلز پارٹی شہیدوں کی جماعت ہے جو ہ ر طبقے کا خیال رکھتی ہے۔ دیگر سیاسی جماعتوں کے قائدین مقدمات کا سامنا کرنے کے بجائے ملک کے باھر فرار ہوجاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ واحد آصف زرداری ہیں جنہوں نے سالوں جیلوں میں گذارے۔ ھم بلاول بھٹو زرداری کو وزیراعظم دیکھنا چاھتے ہیں۔

پیپلزپارٹی سندھ کے صدر نثار کھوڑو کا مزید کہنا تھا کہ خواجہ سراؤں کو الیکشن میں ووٹ دینے کا حق حاصل ہیں اس لئے خواجا سرا برابر کے شہری ہیں۔

انہوں نے کہا کہ  مشترکہ پارلیمنٹ کے اجلاس میں الیکٹرانک ووٹنگ مشین کو انتخابات میں مسلط کرنے کی سازش کرکے الیکشن کمیشن کی خودمختاری پر بھی حملہ کیاگیا ہے۔

Facebook Comments Box