اسلام آباد کا ایم بی اے پاس نوجوان محنت اور عظمت کی اعلیٰ مثال

اسلام آباد میں اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان نے ملازمت کی بجائے اپنے والد کے فرائی چنے کاروبار کو وسعت دینے کا فیصلہ کیا۔اور 10 افراد کو روزگار فراہم کرکے ان نوجوانوں کے لیے مثال بن گیا جو دوسروں کے ہاں ملازمت تلاش کرتے ہیں۔

حمزہ صدیق کا تعلق اسلام آباد سے ہے۔ انہوں نے ایم بی اے ( ماسٹرز ان بینکنگ اینڈ فنانس) گورنمنٹ یونیورسٹی سے کی، کچھ عرصہ ملازمت کی اور پھر اپنے والد کے کاروبار کی طرف آگئے.

یہ بھی پڑھیے

بابا گرو نانک کا جنم دن ، الحمراء آرٹس کونسل میں تصویری مقابلے کا انعقاد

سکھر انتظامیہ گھروں کی بجائے اسکولوں میں ویکسینیشن کرنے لگی

حمزہ صدیق کا نیوز360 سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ انہوں نے پہلے سوچ رکھا تھا کہ ماسٹرز کرنے کے بعد وہ ملازمت کی بجائے اپنے والد کے کاروبار سے وابستہ ہو جائیں گے کیونکہ کہ کاروبار میں زیادہ مواقع اور برکت ہوتی ہے۔

حمزہ صدیق نے بتایا کہ ان کے والد نے اسلام آباد کے سیکٹر جی 7 میں اکیلے ہی سترہ اٹھارہ برس قبل ایک پارک میں محدود پیمانے پر فرائی چنے کےکاروبار کا آغاز کیا۔ اچھی غذا کی مناسب قیمت اور غذائیت بخش اشیاء کی فروخت کے باعث ان کا کاروبار فروغ پاتا رہا۔

حمزہ صدیق نے نیوز 360 سے مزید کیا کہا دیکھتے ہیں ان کے اس انٹرویو میں

Facebook Comments Box