اسلام آباد میں بلدیاتی انتخابات ای وی ایم کے ذریعے ہوں گے، آرڈیننس جاری

صدارتی آرڈیننس کے مطابق آئی سی ٹی کے لیے میئر کا انتخاب براہ راست کیا جائے گا۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں آئندہ بلدیاتی انتخابات الیکٹرانک ووٹنگ مشین(ای وی ایم) کے ذریعہ ہوں گے، اس حوالے سے صدر مملکت نے 109 صفحات پر مشتمل آرڈیننس جاری کردیا۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں آئندہ بلدیاتی انتخابات کے تحت میئر کا آئی سی ٹی (اسلام آباد کیپٹل ٹیریٹری) کے لئے براہِ راست انتخاب کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیے

رشوت نا دینے پر لاہور کے گریجویٹ ’’کافی‘‘ فروش پر زمین تنگ کردی گئی

وزیراعظم کے بعد چیئرمین نیب کا بھی عدالتوں سے شکوہ

آرڈیننس کے مطابق اسلام آباد کیپیٹل ٹیریٹری کی میٹروپولیٹن کارپوریشن کونیبرہڈ کونسل بنایا گیا جس میں آئی سی ٹی کے سوا کنٹونمنٹ کے تمام علاقے شامل کیے گئے ہیں۔ جس کے تحت ہر نیبرہڈ کونسل کی آبادی 20 ہزار نفوس پر مشتمل ہوگی۔

صدر مملکت کی جاری کیے گئے آرڈیننس کی مطابق بلدیاتی حکومت اور نیبرہڈ کونسل کی مدتِ اقتدار 4 سال مقرر کی گئی ہے جبکہ میئر اسلام اباد کی کابینہ 12 رکنی ہو گی۔

آرڈیننس کے مطابق آئی سی ٹی کونسل 70 اراکین پر مشتمل ہوگی۔ آرڈیننس کے مطابق الیکشن میں 22 سال سے کم عمر کے افراد حصہ نہیں لے سکیں گے، تاہم یوتھ ممبر کی عمر 18 سے 25 سال رکھی گئی ہے۔

نیبرہڈ کونسل میں جنرل ممبران، اقلیتیں، خواتین، یوتھ اور بزرگ شہری شامل ہوں گے جبکہ آئی سی ٹی کونسل میں بھی خواتین، اقلیتی ممبران، تاجر، نوجوان، لیبر، کسان اور بزرگ شہریوں پر مشتمل ہوگی۔

Facebook Comments Box