وزیراعظم عمران خان کی روس کے صدر پیوٹن سے ون آن ون ملاقات

ملاقات 3گھنٹے جاری رہے گی، روس یوکرین تنازع کے بعد ملاقات اہمیت اختیار کرگئی،کریملن نے ملاقات کادورانہ ایک گھنٹے بڑھادیا،وزیراعظم کی جنگ عظیم میں ہلاک ہونے والے فوجیوں کی یادگار پر بھی حاضری

وزیراعظم عمران خان کی روس کے صدر ولادیمیر پیوٹن سے ون آن ون ملاقات شروع ہوگئی۔دونوں رہنماؤں میں ملاقات 3 گھنٹے تک جاری رہے گی۔

ذرائع ابلاغ کے مطابق دونوں رہنماؤں کے درمیان دوطرفہ تعلقات اور اہم امور پر تبادلہ خیال کیا جارہا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

روسی صدر پیوٹن کا یوکرین کے خلاف اعلان جنگ


روس کا یوکرین پر حملہ پاکستان اسٹاک مارکیٹ کو لے بیٹھا

خیال رہے کہ وزیراعظم عمران خان گزشتہ روز روس کے دو روزہ سرکاری دورے پر ماسکو پہنچے تھے جہاں ان کا سرخ قالین پر استقبال کیا گیا تھا۔

روسی میڈیا کے مطابق دونوں رہنماؤں کے درمیان پہلے 2 گھنٹے تک ملاقات ہونا تھی تاہم کریملن حکام نے ملاقات کا دورانیہ 3 گھنٹے تک بڑھادیا ہے۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق  روس کے یوکرین پر حملے کے بعد وزیراعظم عمران خان اور ولادیمیر پیوٹن کی ملاقات اہمیت اختیار کرگئی ہے۔ اطلاعات کے مطابق عمران خان اور ولادیمیر پیوٹن کے درمیان ہونے والی ملاقات میں پاک روس تعلقات سمیت خطے کی صورتحال پر تبادلہ خیال ہو گا۔

 ذرائع ابلاغ کے مطابق ملاقات میں دو طرفہ امور، خطے کی صورتحال اور خصوصاً افغانستان میں رونما ہونے والی سیاسی صورتحال پر غور ہوگا۔ ملاقات کے بعد وفود کی سطح کے مذاکرات ہوں گے، جن میں مختلف شعبوں میں تعاون پر باہمی یادداشت کے معاہدے کئے جائیں گے۔

قبل ازیں آج صبح وزیراعظم نے دوسری جنگ عظیم میں ہلاک ہونے والے فوجیوں کی یادگار پر بھی حاضری دی۔ یادگار کریمیلین کے الیگزینڈر گارڈن میں تعمیر کی گئی۔ وزیراعظم نے یادگار پر پھول بھی رکھے۔

متعلقہ تحاریر