سہولیات کی عدم دستیابی پر شہری ایکشن کمیٹی نوڈیرو کا سول اسپتال کا دورہ

چیئرمین ایکشن کمیٹی نے ایڈمنسٹریٹر اسپتال نبی بخش بھٹو کی سہولیات کی فراہمی کی یقین دہانی پر دھرنے کا پروگرام موخر کردیا۔

شہداء کے شہر نوڈیرو میں 100 بیڈز پر مشتمل سول اسپتال نوڈیرو میں سہولیات کی عدم دستیابی کے شکایات پر شہری ایکشن کمیٹی کے وفد ایڈمنسٹریٹر نبی بخش بھٹو سے ملاقات کی اور شکایات کے ازالے کا کہا۔

ملاقات کرنے والے وفد میں شہری ایکشن کمیٹی کے چیئرمین غلام حیدر ناریجو ، انجنيئر جاويد احمد بھٹو ، مولانا عبدالقدوس پنہور ، محمد سليم چنه ، جي يو آئی کے حافظ جميل احمد جروار ، مولانا عبدالسلام دھاريجو، عبدالوہاب بھٹو ، پ پ پ ( شہيد بھٹو ) علی اکبر مگريو ، غلام نبی کولاچی ، مسلم ليگ ( ف ) الطاف حسين بوہڑیو ، امداد علی ميرانی ، قومی عوامی تحريک  امان الله بھٹو ، سکندرعلی لاشاری ، سرتاج احمد شيخ ، منظور منگی کے علاوہ شہر کے صحافیوں کی بڑی تعداد نے شرکت۔

یہ بھی پڑھیے

کراچی میں موسم گرما میں پانی کا سنگین بحران پیدا ہونے کا خدشہ

پی ایف یو جے اور ایس یو جے کے زیراہتمام اطہر متین کے قتل کے خلاف مظاہرہ

وفد نے سول اسپتال کے مختلف حصوں کا دورہ کیا اور سہولیات کے حوالے سے اسپتال کے عملے سے تفصیلات حاصل کیں، مختلف ٹيسٹوں کی بارے میں پوچھنے پر ملازمین نے بتایا کہ یہاں کی لیبارٹری نان فنکشنل ہے جبکہ او پی ڈی میں صرف ایک ڈاکٹر بیٹھا تھا جہاں پر لگ بھگ ایک سو کی تعداد میں مریض موجود تھے۔

وفد نے اس کے بعد ایم ایس کے آفس میں PPHI کی جانب سے مقرر کردہ ایڈمنسٹریٹر نبی بخش بھٹو سے ملاقات کر کے اسپتال میں سہولیات کی عدم دستیابی کے متعلق معلومات حاصل کیں۔

جس میں نبی بخش بھٹو نے اعتراف کرتے ہوئے کہا کے آپ کی شکایات جائز ہیں مگر جیسا کہ اسپتال ابھی PPHI کے حوالے کیا گیا ہے ، ہم بہت جلد ہی سب سہولیات فراہم کرکے شہریوں کی شکایات ختم کرینگے۔

اس موقعہ پر  شہری ايکشن کاميٽی کے چيئرمين غلام حيدر ناريجو ، جاويد احمد بہٹو نے  صحافيوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ گذشتہ 14 سالوں سے  شہيدوں کے نام پر سندھ حکومت قائم ہے ، مگر افسوس سے کہنا پڑ رہا ہے کہ جب شہيدوں کے شہر میں ہی صحت کی سہولیات کی یہ حالت ہے تو باقی سندھ کی اسپتالوں کی حالت کیا ہوگی اور عوام کو کتنی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہوگا۔

ان کا کہنا تھا ہم پھر بھی ایڈمنسٹریٹر صاحب کی یقین دہانی کرانے پر اپنے احتجاج کو کچھ وقت کے لیے موخر کررہے ہیں، اگر کچھ دنوں میں شہریوں کو صحت کی مکمل سہولیات فراہم نہیں کی گئیں تو بہت جلد مسائل کے حل کے لیے اسپتال کے سامنے  احتجاجی دھرنا دیا جائے گا۔

متعلقہ تحاریر