قصور پولیس کی کارروائی ، دو نوسرباز گرفتار

گرفتار ملزمان خود کو ڈپٹی ڈائریکٹر نیب کا پی اے ظاہر کرکے لوگوں سے فراڈ کرتے تھے۔

قصور پولیس نے خود کو ڈپٹی ڈائریکٹر نیب کا پرسنل اسسٹنٹ (پی اے) ظاہر کرنے والے دو نوسر بازوں کو گرفتار کرلیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ جیل قصور میں خود کو ڈپٹی ڈاٸریکٹر نیب کا پی اے ظاہر کرنے والے دو نوسر باز جیل انتظامیہ کے ہتھے چڑھ گٸے۔

یہ بھی پڑھیے

مسجد وزیر خان کیس: صبا قمر اور بلال سعید کی بریت کی درخواستیں مسترد

کراچی پولیس کی بڑی کارروائی، 80 لاکھ کی چوری شدہ پتی برآمد

سپرٹینڈنٹ جیل غلام سرور سمرہ نے سوالات پوچھے تو متعلقہ ملزمان جواب نہ دے سکے ، جس پر سپرٹینڈنٹ کو شک گزرا تو انہوں نے نوسربازوں سے اپنے کارڈ چیک کروانے کو کہا۔

قصور سپرٹینڈنٹ نے جب کارڈ چیک کیے تو کارڈ جعلی نکلے جس پر دونوں ملزمان اور غلام رسول شہزاد اور محمد ارشد کو پولیس تھانہ بی ڈویژن کے حوالے کر دیا ۔

ڈپٹی ڈاٸریکٹر نیب کا جعلی پی اے غلام رسول شہزاد قصور روڈ کوٹ کا رہاٸشی ہے اور دوسرا ساتھی ارشد اوکاڑہ کا رہاٸشی ہے۔

پولیس تھانہ بی ڈویژن قصور نے سپرٹینڈنٹ جیل کی مدعیت میں مقدمہ درج کر کے تفشیش شروع کر دی ہے۔

متعلقہ تحاریر