رانا شمیم کی بہو ،پوتے اور پوتی کی جانب سے دائر درخواست خارج

درخواست شمیم ​​کی بہو انعم احمد رانا، پوتے حمزہ رانا اور پوتی اریبہ رانا نے ایڈووکیٹ احمد حسن رانا کے ذریعے دائر کی تھی۔

گلگت بلتستان کے سابق چیف جج رانا محمد شمیم کی بہو ، پوتے اور پوتی کی جانب سے دائر درخواست کو اسلام آباد ہائی کورٹ نے مسترد کردیا ہے۔

مذکورہ بالا افراد کی جانب سے اسلام آباد ہائی کوٹ میں دائر درخواست میں توہین عدالت کیس کے فیصلے تک رانا شمیم کی کردار کشی روکنے اور چار پی ٹی آئی رہنماوں کی نااہلی کی استدعا کی گئی تھی۔

یہ بھی پڑھیے

وزیراعظم نے اسلام آباد ہراسگی اور موٹروے ریپ کیس کی رپورٹ طلب کرلی

خیبرپختونخوا میں حالیہ بارشوں اور برفباری سے 18 افراد جاں بحق

اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے گذشتہ روز درخواست پر سماعت کرنے کے حوالے سے فیصلہ محفوظ کرلیا تھا۔ تاہم آج فیصلہ سناتے ہوئے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے درخواست مسترد کردی ہے۔

ریٹائرڈ سینئر جج رانا شمیم ​​کی بہو اور نواسوں نے اسلام آباد ہائی کورٹ (آئی ایچ سی) سے رجوع کیا تھا ، جس میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنماؤں بشمول سینیٹر فیصل واوڈا اور وفاقی وزیر فواد چوہدری کو بطور رکن پارلیمنٹ نااہل قرار دینے کی درخواست کی گئی تھی۔

درخواست گزاروں نے عدالت سے یہ بھی استدعا کی تھی کہ توہین عدالت کیس کے فیصلے تک میڈیا کو رانا محمد شمیم ​​کی کردار کشی سے روکنے کا حکم جاری کیا جائے۔

درخواست شمیم ​​کی بہو انعم احمد رانا، پوتے حمزہ رانا اور پوتی اریبہ رانا نے ایڈووکیٹ احمد حسن رانا کے ذریعے دائر کی تھی۔

ایڈووکیٹ احمد حسن رانا کی جانب سے دائر درخواست میں وزارت قانون، پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) کے چیئرمین سینیٹر واوڈا، وفاقی وزیر چوہدری، ایم پی اے صداقت عباسی، وزیر مملکت فرخ حبیب، سابق اٹارنی جنرل انور منصور خان، اے آر وائی نیوز کے اینکر پرسن کاشف عباسی، وسیم بادامی اور دیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔

اے آر وائی نیوز کے منیجنگ ڈائریکٹر، گلگت بلتستان (جی بی) سپریم کورٹ آف اپیل کے رجسٹرار، شہید ذوالفقار علی بھٹو یونیورسٹی آف لاء کے رجسٹرار اور پنجاب کے ایڈووکیٹ جنرل کیس میں فریق ہیں۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ سینیٹر فیصل واوڈا نے 15 نومبر 2021 کو نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں رانا محمد شمیم پر بے بنیاد الزامات لگائے اور توہین آمیز زبان استعمال کی۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ فیصل واوڈا ، فواد چوہدری ، صداقت عباسی اور وزیر مملکت فرخ حبیب نے مختلف ٹی وی شوز میں رانا محمد شمیم ​​کے خلاف الزامات لگائے ، اس لیے فواد چوہدری اور فیصل واوڈا کو نااہل قرار دیا جائے جبکہ فرخ حبیب سے معافی کی استدعا کی گئی ہے۔ درخواست میں پیمرا کے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر مذکورہ اینکر پرسنز کے لیے بھی سزا کا بھی مطالبہ کیا گیا تھا۔

Facebook Comments Box