لاہور میٹرو بس منصوبے نے بھی پشاور بی آر ٹی کا رنگ اپنا لیا

لاہور میٹرو بس کے ٹریک پر مسافروں کے پیدل چلنے کی ویڈیو اور تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں۔

پاکستان کے صوبہ خیبرپختونخوا کے دارالحکومت پشاور میں بس ریپڈ ٹرانزٹ (بی آر ٹی) منصوبے کے بعد صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور کی میٹرو بس سروس بھی شہریوں کے لیے مشکلات کا باعث بننے لگی ہے۔

بدھ کے روز لاہور کی میٹرو بس نمبر 12 گجومتہ جاتے ہوئے اتفاق اسٹیشن کے قریب خراب ہوگئی تھی۔ تکنیکی خرابی کے باعث مسافروں کو بس سے اتر کر سخت گرمی میں پیدل سفر کرنا پڑا تھا۔

یہ بھی پڑھیے

پاکستان کے پہلے ڈیجیٹل بینک کا آغاز رواں ماہ

مسافر ٹریک پر پیدل چلتے ہوئے اسٹاپ تک پہنچ کر دوسری بس میں سوار ہو کر روانہ ہوئے تھے۔ ٹریک پر مسافروں کے پیدل چلنے کی ویڈیو اور تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں۔

نیوز 360 سے گفتگو کرتے ہوئے میٹرو بس سروس کے مسافروں نے کہا کہ یہ پہلا موقع نہیں ہے کہ تکنیکی خرابی کی وجہ سے کوئی بس خراب ہوئی ہو بلکہ اب بسز کا خراب ہونا معمول کی بات بن گئی ہے۔ عملے کی خدمات کا معیار بھی کم ہوگیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ میٹرو بسز میں تکنیکی خرابی کے ساتھ ساتھ بسز کا ٹریک بھی جگہ جگہ سے ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کی جانب سے سفری اجازت ملنے کے بعد لاہور، ملتان اور راولپنڈی میں میٹرو بس سروس شہریوں کے لیے پریشانی کا باعث بن گئی ہے۔

اس سے قبل حکومت پنجاب نے کرونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ملتان، راولپنڈی اور لاہور میں میٹرو بس سروس کو معطل کردیا تھا جس کی وجہ سے ماس ٹرانزٹ اتھارٹی کو 22 دن میں 12 کروڑ روپے سے زیادہ کا نقصان ہوا تھا۔

متعلقہ تحاریر