کراچی میں ایک اور خاتون ہراسگی کا شکار

زینب مارکیٹ کے قریب خاتون کو ہراساں کرنے والے نوجوان کی ویڈیو وائرل ہوگئی۔

کراچی میں ایک اور خاتون کو ہراساں کرنے کا واقعہ پیش آیا ہے۔ زینب مارکیٹ کے قریب موٹرسائیکل سوار نوجوان نے رکشہ میں سوار خاتون کو ہراساں کیا. متاثرہ لڑکی نے ویڈیو بناکر سوشل میڈیا پر شیئر کردی۔

پاکستان میں پچھلے کچھ روز سے گھریلو تشدد، بچوں اور خواتین سے زیادتی اور انہیں ہراساں کرنے کے واقعات میں اضافہ دیکھا جارہا ہے۔ خواتین سے ہراسگی اور تشدد کے بڑھتے واقعات پر پڑھے لکھے طبقے میں تشویش پائی جاتی ہے۔

گزشتہ روز کراچی کے علاقے صدر کی زینب مارکیٹ میں موٹرسائیکل پر سوار نوجوان نے رکشے میں سوار خاتون کا پیچھا کیا اور اسے مسلسل تنگ کرتا رہا۔  خاتون نے جب ویڈیو ریکارڈنگ شروع کی تو ملزم نے رکشے کو رکوانے کی کوشش کی۔ اس موقع پر خاتون نے پولیس کو کال کرنے کی دھمکی دی تو نوجوان فرار ہوگیا۔

یہ بھی پڑھیے

سندھ پولیس کی خواتین اہلکار ہراسگی کا شکار

خاتون نے اپنے ساتھ پیش آئے واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل کردی ہے جس میں موٹرسائیکل سوار کا چہرا با آسانی دیکھا جاسکتا ہے۔ کراچی میں خاتون کو ہراساں کرنے پر شہری اوباش نوجوان کی گرفتاری کا مطالبہ کررہے ہیں۔

واضح رہے کہ کچھ روز قبل شاہراہ فیصل پر چند نوجوانوں نے رکشے میں سوار اسکول ٹیچر کو چھیڑا تھا۔ ہراسگی کی ویڈیو وائرل ہونے پر پولیس نے 21 سالہ ملزم حمزہ مغل کو گرفتار کرکے سلاخوں کے پیچھے ڈالا تھا۔ اس سے قبل ایک خاتون پولیس اہلکار کی ویڈیو بھی وائرل ہوئی تھی جس میں انہوں نے ساتھی ملازمین پر ہراساں کرنے کا الزام عائد کیا تھا۔

Facebook Comments Box