کھوکھرا پار میں قدرتی طور پر زمین سے پانی نکلنے لگا

سحرائے تھر میں اکثر لوگوں کو صاف پانی کے حصول کے  لیے کئی کلو میٹرز کا سفر طے کرنا پڑتا ہے لیکن کھوکھرا پار کے گاؤں سوموں میں قدرتی طور پر زمین سے نکلنے والا پانی لوگوں کی توجہ کا مرکز بنا ہوا ہے۔

پاکستان اور بھارت کے سرحدی علاقے میں واقع گاؤں سوموں کے رہائشیوں نے نیوز 360 کے نامہ  نگار عبدالقادر منگریو سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ 2005 میں سماجی تنظیم تھردیپ نے گاؤں میں پانی کی فراہمی کے لیے کھدائی کی تھی۔ طویل کھدائی کے باوجود پانی اوپر نہیں آسکا تھا، بعدزاں اچانک پانی کی سطح بلند ہوگئی  اور قدرتی طور پر پانی زمین سے باہر نکلنے لگا۔ گاؤں کے لوگوں نے سماجی تنظیم کی مدد سے پائپ لگایا جہاں سے گزشتہ 16 سالوں سے تیز رفتاری سے پانی کا بہاؤ جاری ہے۔

سوموں کے رہائشیوں کا کہنا ہے کہ پانی میں سنکھیا کی تعداد بہت زیادہ ہے، جس  کی  وجہ سے یہ  پانی صرف  گھریلو استعمال اور مویشیوں کے پینے کے لیے استعمال میں لایا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

بارشوں سے تھر کے باسیوں کے چہرے کھل اٹھے

Facebook Comments Box