کیا پنجاب میں سیاسی کشمکش کا فیصلہ اب بلے اور گیند پر ہوگا ؟

ترجمان پنجاب حکومت کے مطابق ٹیپ بال میچ ستمبر کے وسط میں گورنر ہاؤس یا قذافی اسٹیڈیم میں کھیلا جائے گا۔

پنجاب حکومت کے ترجمان فیاض الحسن چوہان نے حکومت اور حزب اختلاف کے درمیان کرکٹ میچ کرانے کا اعلان کیا ہے، اس حوالے سے ترجمان نے اپوزیشن قیادت سے باضابطہ رابطہ کیا ہے۔

پنجاب میں سیاست کے محاذ پر دلچسپ پیش رفت  کرتے ہوئے فیاض الحسن چوہان نے پاکستان پیپلز پارٹی کے پارلیمانی لیڈر سید حسن مرتضی سے رابطہ کیا ہے جبکہ انہوں نے مسلم لیگ ن کی رکن پنجاب اسمبلی حنا پرویز بٹ سے بھی رابطہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

فواد چوہدری نے میڈیا مالکان کو پاکستان کا ”کالیا“ قرار دے دیا

مذکورہ رہنماؤں کے ساتھ رابطوں کے دوران فیاض چوہان نے حکومت اور اپوزیشن کے درمیان کرکٹ میچ کی تجویز پیش کی  ہے۔

اطلاعات کے مطابق ترجمان پنجاب حکومت نے اپنی ٹیم کو حتمی شکل دے دی ہے، جبکہ انہوں نے حزب اختلاف کی جماعتوں کو بھی جلد اپنی ٹیم کو حتمی شکل دینے کی درخواست کی ہے۔

پنجاب حکومت کی کرکٹ ٹیم

حکومت پنجاب کی اعلان کردہ ٹیم جن کھلاڑیوں پر مشتمل ہو گی ان میں ترجمان صوبائی حکومت فیاض الحسن چوہان، صوبائی وزیر حافظ ممتاز احمد، سابق وزیر سمیع اللہ چوہدری ، صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال، وزیر کھیل تیمور بھٹی، وزیر تعلیم ڈاکٹر مراد راس، ایم پی اے ندیم عباس بارا، صوبائی وزیر عنصر مجید نیازی، ملک عمر فاروق، حنیف پتافی، صوبائی وزیر حافظ عمار یاسر، صوبائی وزیر سردار حسین بہادر دریشک اور راجہ یاسر ہمایوں شامل ہیں۔

Facebook Comments Box