جنگ کے مالک میر شکیل الرحمان کی ملازمین سے ایک اور وعدہ خلافی

سپریم کورٹ کے حکم کے باوجود جنگ گروپ کے ملازمین 5 اگست کو ملنے والے بونسز کے تاحال منتظر ہیں۔

جنگ پبلیکیشنز ایمپلائز یونین (سی بی اے) نے بونس کی ادائیگی کے لیے جنگ اور جیو گروپ کے مالک میر شکیل الرحمان کو خط لکھ دیا ہے۔

سی بی اے یونین کی جانب سے شکیل الرحمان چیف ایگزیکٹو آئی این سی ایل جنگ گروپ کراچی کو خط ایم ڈی شاہ رخ حسن کے توسط سے لکھا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

سندھ: جونیئر اسکول ٹیچرز کی بھرتیاں، ایک فیصد امیدار بھی ٹیسٹ پاس نہ کرسکے

خط کے متن کے مطابق یونین سے طے شدہ معاہدے کے مطابق دو بونسز کی ادائیگی کا شیڈول 5 اگست کو طے کیا گیا تھا۔ جبکہ آپ نے ابھی تک دونوں بونسز جن میں (10 سی) بھی شامل ہے کی ادائیگی نہیں کی گئی ہے، جوکہ معاہدوں اور سپریم کورٹ کے حکم کی سنگین خلاف ورزی ہے اور توہین عدالت بھی ہے۔

شکیل امین کانگا سیکرٹری جنرل سی بی اے یونین کی جانب سے سے لکھے گئے خط میں مزید کہا گیا ہے کہ "آپ سے درخواست ہےکہ خط ملنے کے فوری بعد دونوں بونسز کی ادائیگی کریں تاکہ کارکنان میں پائی جانے والی  بے چینی دور ہوسکے۔”

اگست کے مہینے دیئے جانے والے بونسز کی عدم ادائیگی پر سوشل میڈیا صارفین نے جنگ گروپ کے مالک کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ ” حکومت کی ہر پالیسی پر تنقید کو اپنا جائز حق سمجھنے والے میر شکیل الرحمان کے پاس پیسے نہیں ہیں کہ وہ ورکرز کو ان کے بونسز کی ادائیگی کرسکیں۔

Facebook Comments Box