بیڈمنٹن کھلاڑی ماہور شہزاد کے امتحانات میں شاندار نتائج

خاتون کھلاڑی نے بتایا کہ ان  کا  امتحان  اولمپکس  میں  سلیکشن  کے  بعد ہوا تھا۔

پاکستانی بیڈمنٹن کھلاڑی ماہور شہزاد نے لندن یونیورسٹی کے امتحانات میں اپنے شاندار نتائج سوشل  میڈیا  پر  مداحوں کے ساتھ شیئر کیے۔

ٹوکیو اولمپکس 2020 کے دستے میں شامل پاکستانی خاتون کھلاڑی ماہور شہزاد نے سماجی  رابطوں  کی  ویب  سائٹ  ٹوئٹر  پر لندن یونیورسٹی کے امتحانات میں اپنے  شاندار نتائج شیئر  کرتے  ہوئے  بتایا  کہ  ان  کا  امتحان  اولمپکس  میں  سلیکشن  کے  بعد  21   جون  کو  ہوا۔ بقول  ماہور  شہزاد  ان  کے لیے  اولمپکس  اور  امتحانات  کی  تیاری  ایک  ساتھ  کرنا  مشکل  تھا  لیکن  وہ  خوش  ہیں  کہ  انہوں  نے امتحانات  میں  کامیابی  حاصل  کی۔

یہ  بھی  پڑھیے

پاکستانی اولمپئینز کی حوصلہ افزائی سے زیادہ حوصلہ شکنی

یہاں  یہ  بات  قابل  ذکر  ہے  کہ ماہور  شہزاد 2017 میں  پاکستان انٹرنیشنل ٹورنامنٹ میں ویمنز سنگل کی چیمپئن رہ  چکی  ہیں۔

کچھ  عرصہ  قبل  ماہور نے سوشل  میڈیا  پر  ایک ویڈیو پوسٹ بھی کی تھی جس  میں  کہا  تھا کہ  پاکستان میں دوسرے بیڈمنٹن کھلاڑیوں کی طرف سے ان کا مذاق اڑایا گیا  اور ان  کی  سلیکشن  پر  سوالات  اٹھائے  گئے۔

واضح  رہے  کہ ٹوکیو اولمپکس  میں ماہور شہزاد  برطانیہ کی  کرسٹی گلمور اور جاپان کی اکانے یاماگوچی سے  شکست کھا گئیں تھیں۔

Facebook Comments Box