فلسطینی استعمال شدہ پلاسٹک کو دوبارہ کارآمد کیسے بناتے ہیں؟

سات فلسطینی شہری روزانہ 8 گھنٹے شہر خان یونس میں ایک چھوٹی سی فیکٹری میں کام کرتے ہیں جو کہ غزہ کی پٹی میں واقع ہے۔

یہ افراد یہاں پلاسٹک سے بنی اشیاء کو چھانٹتے ہیں، اُن کی صفائی کرتے ہیں اور اُنہیں دوبارہ استعمال میں لانے کے لیے تیار کرتے ہیں۔ مقامی کارخانے دار ان اشیاء کو دوبارہ استعمال میں لانے کے لیے نئی اشیاء بناتے ہیں۔

ایک کارخانے کے مالک کا کہنا ہے کہ اُنہوں نے پلاسٹک کو ری سائیکل کرنے کا کارخانہ 2006 میں لگایا تھا جب وہ کوئی ذریعہ آمدن نہیں اختیار کر پائے تھے۔

نیوز 360 نے اس معاملے پر ڈیجیٹل رپورٹ تیار کی ہے۔

یہ بھی دیکھیے

دیکھنے والوں پر سحر طاری کرنے والی آزاد کشمیر کی رتی گلی جھیل

Facebook Comments