فوربز نے وارن بفے کو دنیا کا مخیر ترین شخص قرار دے دیا

امریکی سرمایہ کار کا رواں برس بھی 5 امدادی اداروں کو 4ارب ڈالر عطیہ کرنیکا اعلان، اب تک 48 ارب ڈالر عطیہ کرچکے،فوربز

امریکی جریدے فوربز نے وارن بفے کو دنیا کا سب سے بڑا مخیر شخص قرار دےدیا۔ وارن بفے نے ہر سال کی طرح اس سال بھی موسم گرما کے تحفے کے طور پر  اپنی کمپنی کےمزید  4 ارب ڈالر مالیت کے حصص 5 رفاہی تنظیموں کو عطیہ کرنے کا اعلان کردیا۔

نئے اضافے کے بعد وارن بفے کی اب تک کیے گئے عطیے کی مالیت 48 ارب ڈالر تک جاپہنچی ہے  اور وہ دنیا کے سب سے بڑے مخیر شخص کے طور پر سامنے آئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

ایلو ن مسک  کے ستارے گردش میں آگئے، 258 ارب ڈالر ہرجانے کا مقدمہ دائر

سری لنکا میں معاشی بحران مزید سنگین،سرکاری دفاتر اور اسکول 2 ہفتے کیلیے بند

امریکا کے مایہ ناز سرمایہ کار وارن بفے (جنہیں آریکل آف اوماہا بھی کہا جاتا ہے) نے  منگل کو اپنی کمپنی  کے 4ارب ڈالر مالیت کے شیئرزموسم گرما کے17ویں سالانہ تحفے کے طور پر 5 رفاہی اداروں کو دینے کا اعلان کیا ہے ۔ وارن بفٹ کی عطیہ کردہ رقم انہیں 5 اداروں کو دی جائے گی جو 2006 سے یہ عطیات وصول کررہے ہیں۔

4ارب ڈالر مالیت کے حصص میں سے 3.1ارب ڈالر کا سب سے بڑا حصہ بل اینڈ ملینڈا گیٹس فاؤنڈیشن کے حصے میں آئے گا جہاں سے وارن بفٹ گزشتہ جون میں بطور غیرفعال ٹرسٹی مستعفی ہوگئے تھے۔

وارن بفٹ کی مرحوم اہلیہ   کی قائم کردہ سوسن تھامپسن  بفے فاؤنڈیشن کے حصے میں 30 کروڑ ڈالر جبکہ ان کے 3 بچوں  کی جانب سے قائم کردہ  رفاہی تنظیموں کے حصے میں 20،20 کروڑ ڈالر آئیں گے جن میں دی شیرووڈ فاؤنڈیشن، دی ہاورڈ جی بفے فاؤنڈیشن اور دی نووو فاؤنڈیشن شامل ہیں۔

فوربز نے جنوری میں اندازہ لگایا تھا کہ وارن بفے   اب تک 46.1 ارب ڈالر  خیرات کرکے بل اور میلنڈا گیٹس کو پیچھے چھوڑچکے ہیں ، جن کے ساتھ اس نے 2010 میں صرف  10ارب ڈالر سے عطیات دینے کے وعدے کی بنیاد رکھی تھی۔ وہ اب تک کے پہلے انسان ہیں جو 48 ارب  ڈالر عطیہ کرچکے ہیں ۔

Facebook Comments Box