زینب قیوم نے غریدہ فاروقی کو آئینہ دکھا دیا

مخصوص شخصیات کے دفاع کی مذمت کرتی ہوں، حق کی یہ جنگ اس وقت کیوں نہیں ہوئی جب صدیق جان اور ارشد شریف کی لڑائی ہوئی؟ زینب کا سوال

کچھ دن قبل سابق گورنر سندھ محمد زبیر کی ایک مبینہ ویڈیو وائرل ہوئی جس کے بعد سے خاتون اینکرپرسن غریدہ فاروقی کو اس سے جوڑا جا رہا ہے۔

غریدہ فاروقی ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈز میں شامل ہیں اور سوشل میڈیا یوزرز اس حوالے سے اپنی رائے کا اظہار کررہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

حجاب پہننا نارمل نہیں، پرویز ہودبھائی کے بیان سے سوشل میڈیا پر بحث

صحافی جویریہ صدیقی نے غریدہ کے حق میں سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر لکھا کہ میں غریدہ فاروقی کے خلاف ٹوئٹر ٹرینڈ اور پوری مہم کی سخت مذمت کرتی ہوں۔

جویریہ کی ٹویٹ کے جواب میں معروف ماڈل و ادکارہ زینب قیوم نے لکھا کہ میں غریدہ فاروقی کو غلط معلومات اور سیاسی طور پر جانبدار کہنے کے الزامات پر مبنی ٹوئٹر ٹرینڈز کی مذمت کرتی ہوں۔

لیکن زینب نے یہ بھی کہا کہ "مگر میں مخصوص لوگوں کے دفاع کی بھی مذمت کرتی ہوں، حق کی یہ جنگ اس وقت کیوں نہیں ہوئی جب صدیق جان اور ارشد شریف کی لڑائی ہوئی؟ اسد طور اور شفا یوسفزئی کی لڑائی میں حق کی جنگ کہاں تھی؟”

اینکرپرسن غریدہ فاروقی پر یہ الزام ہے کہ وہ غیرجانبدار نہیں ہیں بلکہ اپنے سیاسی رجحانات کی عکاسی اکثر پروگرامز میں کرتی نظر آتی ہیں۔

Facebook Comments Box